تیل کی ممکنہ قیمت 100 ڈالرز فی بیرل خیال کی جا رہی ہے

تیل کی ممکنہ قیمت 100 ڈالرز فی بیرل خیال کی جا رہی ہے


تیل کی ترسیل اور پیداوار سے منسلک افراد کے لئے ایک عمدہ خبر ہے - پیشن گوئیوں کے تناظر میں تیل کے پاس تمام مواقع موجود ہیں وہ کئی سال کی بلند ترین سطح تک پہنچ جائے اور مستقبل قریب میں 100 ڈالرز فی بیرل کی سطح حاصل کرلے - توانائی کی مارکیٹ کے اس قدر مضبوط قدر خاصے عرصہ سے نہیں دیکھی ہے - بہرحال یہ پیشن گوئی غیر حقیقی اور ماننے میں مشکل معلوم ہوتی ہے - بہرحال کروڈ آئل کی قیمت کے تعین میں بنیادی کردار ادا کرنے والے بنیادی عناصر ایک حوصلہ افزاء اندارے کی تائید میں ہیں - بنک آف امریکہ کے مطابق بھی مستقبل قریب میں ایساء اضافہ مل سکے گا - ماہرین کے مطابق اگلے سال تک تیل کی قیمت میں اتنا بڑا اضافہ دیکھنے کو ملے گا - سال 2021 کی دوسری سہہ ماہی میں تیل کی قیمت با آسانی 70 ڈالر فی بیرل کی سطح تک جاسکتی ہے اور اس کے بعد مزید اوپر بھی جاسکتی ہے اس توقعات کو مثبت معاشی خبروں کی تائید حاصل ہے اور یہ کہ عالمی سطح پر معیشت کے بڑھوتری کے لئے امدادی پروگرام بھی شروع ہونے ہیں - بنک کے مطابق سال 2021 میں برنٹ کروڈ 60 ڈالر فی بیرل کی سطح پر تجارت کرے گا جو کہ گزشتہ اندازے سے 10 ڈالر ذیادہ ہے لیکن حالیہ قیمت سے ابھی بھی 5 ڈالرز نیچے ہے - اس کے قبل گولڈ مین ساچ نے برنٹ کے حوالے سے اپنی پیشن گوئی کو سال 2021 کی تیسری سہ ماہی میں 75 ڈالرز فی بیرل تک بڑھایا ہے

Back

See aslo

ابھی فوری بات نہیں کرسکتے ؟
اپنا سوال پوچھیں بذریعہ چیٹ.